سعودی عرب میں تعلیم حاصل کرنے والے خواہش مند پاکستانی طلبا کیلیے بڑی خوشخبری

ریاض (نیوز ڈیسک) سعودی عرب نے اپنی 25 جامعات میں پاکستانی طلبا کے لیے اسکالرشپ کا اعلان کردیا جس کے تحت منتخب طلبا کو ماہانہ وظیفہ اور دیگر سہولیات بھی فراہم کی جائیں گی۔

ہائیر ایجوکیشن کمیشن پاکستان کے مطابق سعودی عرب نے پاکستانی طلبا کے لیے سیاسیات، قانون، تعلیم، ایڈمنسٹریشن، معاشیات، انجینئرنگ، کمپیوٹر سائنس ، ذراعت، عربی، اسلامک اسٹیڈیز اور میڈیا سائنسز کے شعبے میں اسکالر شپ کا اعلان کیا ہے جس سے ڈپلومہ، بیچلرز، ماسٹر اور پی ایچ ڈی کے طلبا مستفید ہوسکتے ہیں۔

اسکالر شپ کے حامل طلبا کو 850 ریال ماہانہ وظیفہ دیا جائے گا جب کہ سائنس کے شعبے کے طلبا کے لیے وظیفہ 900  سعودی ریال ہوگا۔ اس کے علاوہ طلبا کو ریٹرن ٹکٹ کے ساتھ 3 ماہ کا وظیفہ سمیت مفت میڈیکل کی سہولیات فراہم کی جائیں گی۔

اسکالرشپ میں پاکستان اور کشمیر کے طلبا درخواستیں دے سکتے ہیں، درخواست دینے والے طلبا کی عمر 17 سے 25، ماسٹرز کے لیے30 اور پی ایچ ڈی کے لیے 35 سال مختص کی گئی ہے۔

اسکالر شپ میں پاکستان میں مقیم طلبہ کے لیے 75 فیصد جبکہ یو اے ای میں مقیم پاکستانی طلبہ کے لیے 25 فیصد کوٹہ رکھا گیا ہے۔ ہائیر ایجوکیشن کمیشن پاکستان کی ویب سائٹ پر جاری تفصیلات کے مطابق پاکستانی طلبا کو درج زیل 25 جامعات میں اسکالر شپ دی جائیں گی۔

  • جدہ یونیورسٹی

  • بشاہ یونیورسٹی

  • اُم القرا یونیورسٹی

  • اسلامک یونیورسٹی

  • امام محمد ابنِ سعود اسلامک یونیورسٹی

  • کند سعود یونیورسٹی

  • کنگ عبدالعزیز یونیورسٹی

  • حفار الباطن یونیورسٹی

  • کنگ فیصل یونیورسٹی

  • کنگ خالد یونیورسٹی

  • قاسم یونیوسٹی

  • طیبہ یونیورسٹی

  • طائف یونیورسٹی

  • یونیورسٹی آف حائل

  • جزان یونیورسٹی

  • الجوف یونیورسٹی

  • البہا یونیورسٹی

  • طابق یونیورسٹی

  • نجران یونیورسٹی

  • نادرن بارڈر یونیورسٹی

  • پرنس ستام بن عبدالعزیز یونیورسٹی

  • شقرا یونیورسٹی

  • مجمہ یونیورسٹی

سعودی محکمہ تعلیم کے مطابق 23 جامعات میں 5 فیصد طلبہ کو انرول کیا جائے گا جب کہ نور بنتِ عبدالرحمٰن یونیورسٹی برائے خواتین (ریاض) میں 8 فیصد پاکستانی اور کشمیری طلبہ جب کہ مدینہ منورہ میں واقع جامعہ اسلامیہ میں مجموعی طور پر 85 فیصد نشستوں پر رجسٹریشن کی جائے گی۔